دنیا ختم ہونے کے قریب ہے کیسے . سائنس دانوں نے خوفناک انکشاف کر دیا

بلیک ہولز کی تباہی جاری ماہرین نے ایک ایسا بلیک ہول دریافت کر ڈالا ہے جو کہ روزانہ سورج سے کئی گنا بڑے ستاروں کو ہڑپ کرتا جارہا ہے . اور عنقریب اس دنیا کے سورج کو بھی ہڑپ کر ڈالیں‌گا جس سے اس زمیں‌پر موجود زندگی ختم ہو جائے گی . تفصیلات کے مطابق سائنسدانوں نے ایک نیا بلیک ہو ل دریافت کیا ہے . کوزار کے مرکز میں دیکھا گیا ہے جس کا نام SMSS~J215728.21-360215.1 رکھا گیا ہے۔ اس کی کمیت ہمارے سورج سے بھی 20 ارب گنا زیادہ ہے اور ہر دس لاکھ سال میں ایک فیصد پھیل جاتا ہے۔کوئی بھی بلیک ہول روشن

نہیں ہوتا بلکہ اس کے بالکل قریب پہنچ کر اس میں گرتا ہوا مادّہ زبردست توانائی خارج کرتا ہے جو روشنی اور ایکسریز کی شکل میں ہوتی ہے اور بلیک ہول کو ان ہی مخصوص شعاعوں کے اخراج کی وجہ سے شناخت کیا جاتا ہے ،.


ماہرین کے مطابق اس سے نکلنی والی روشنی پوری کہکشاں سے زیادہ ہے اگر یہ ہماری کہکشاں‌میں‌ہوتا تو چاند سے بھی بہت زیادہ روشن دکھائی دیتا . خیال ہے کہ یہ بگ بینگ کے فوراً بعد پیدا ہونے والے بلیک ہولز میں سے ایک ہے۔ پروفیسر وولف کے مطابق کائنات کے ابتدائی ایام میں اتنے بڑے بلیک ہولز خال خال ہی ملے ہیں اور ہم اس کی وجہ نہیں جانتے کہ یہ آخر کیوں اس قدر تیزی سے بڑھ رہا ہے

اپنا تبصرہ بھیجیں